پاکستانی 13 سالہ عمیمہ عادل دنیا کی کم عمر ترین مائیکروسافٹ سرٹیفائیڈ بن گئی۔

عمیمہ عادل جس کی عمر  13 سال ہے ۔ جس نے پاکستان کا نام روشن کرتے ہوئے دنیا کی کم عمر ترین مائکروسافٹ سرٹیفائیڈ پرسن ان اے ایس پی ڈاٹ نیٹ بن گئی ہے۔
اس نے حال ہی میں ونڈوز اپلیکیشنز ڈیویلپمنٹ کے  ایم سی ٹی ایس امتحان پاس کیا ہے۔

عمیمہ پاکستان کی ایک نہایت زہین اور روشن ستارہ ہے۔ اس نے نعت خوانی کے مقابلو ں میں بھی 60 کے لگ بھگ سرٹیفکیٹ حاصل کئے ہیں۔عمیمہ ماما پرسی گرلز ہائی سکول کراچی کی طالبہ ہے۔

عمیمہ عادل انٹرنیٹ پر بلاگنگ بھی کرتی ہیں۔عمیمہ عادل کا بلاگ اس ربط پر دیکھا جا سکتا ہے۔

ylliX - Online Advertising Network

5 تبصرے “پاکستانی 13 سالہ عمیمہ عادل دنیا کی کم عمر ترین مائیکروسافٹ سرٹیفائیڈ بن گئی۔

  1. اچھی بات ہے اس بچی کو مبارک باد اور آپکو خبر دینے پہ مبارک ہو۔ مگر جنگ جیتنے کے لئیے صرف کسی ایک سپاہی پہ انحصار نہیں کیا جاسکتا خواہ وہ دنیا کا بہادر ترین سپاہی کیوں نہ ہو۔ کینکہ ایک سپاہی یا چند ایک سپاہیوں سے فوج نہیں بنائی جاسکتی۔ اسکے لئیے بہت بڑی تعداد ہزارہوں لاکھوں افراد چاہئیے ہوتے ہیں، بے شک وہ دنیا کے بہترین سپاہی نہ ہوں اور کم درجے کے بہادر ہوں مگر وہ ناگزیر ہوتے ہیں۔

    اسی طرح ایک بچی کا یہ کارنامہ بے شک سنہرے الفاظ میں لکھے جانے کے قابل ہے۔ مگر مستقل کی جنگ جیتنے کے لئیے ہمیں بہت وسیع تعداد میں نئی ٹیکنالوجیز اور خاص کر انفارمیشن اور کمپیوٹر ٹیکنالوجی پاکستان کے کثیر التعداد انسانی وسائل کو ترقی دینی ہوگی۔ اس کے لئیے وقت بہت کم ہے۔

    ورنہ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔

    1. جناب کسی بھی جنگ کو جیتنے کے لئے یا کسی قوم کو ترقی کی طرف گامزن کرنے کے لئے بڑی فوج یا بڑی قوم کا ہونا ضروری نہیں ہوتا ۔ بلکہ ضروری ہوتا ہے کہ اس قوم کا لیڈر بڑا ہو۔ اس فوج کا لیڈر بڑا ہو۔

  2. بلکہ ضروری ہوتا ہے کہ اس قوم کا لیڈر بڑا ہو۔ اس فوج کا لیڈر بڑا ہو۔
    بے شک اسمیں کوئی شک نہیں۔ مگر یہاں تو یہ حالت ہے نہ فوج ہے نہ بڑی نہ چھوٹی۔ نہ لیڈر ہے بڑا تو کیا ایک پاؤ بھر کا چھٹانک سا ہی لیڈر مل جائے جو دیانتدار ہو تو بھی امید ہے کہ اس قوم کی یہ بیٹیاں اور بیٹے کوئی معرکہ سراجام دے سکیں گے۔ مگر ادہر تو یہ پٹاری ہی خالی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں