غیر رجسٹرڈ سمز اور اراکین اسمبلی کا دُہرا معیار

ایک خبر رساں ادارے نے ایک خبر جاری کی ہے جس کے مطابق متعدد اراکیین اسمبلی غیر قانونی طور پر ایسے نمبرز استعمال کر رہے ہیں۔ جن کی سمز ان کے نام پر جاری نہیں کی گئی ہیں۔

نیوز گروپ کی طرف سے یہ دعوی کیا گیا ہے کہ پاکستان کے وزیر داخلہ جنہوں نے گزشتہ دنوں پی ٹی اے کو ایسی تمام سمز بلاک کرنے کے لئے کہا تھا جو غیر قانونی طور پر استعمال کی جا رہی ہیں۔ جن کے کوائف درست نہیں۔ نیوز گروپ کی خبر کے مطابق موصوف وزیر خود بھی غیر قانونی سم استعمال کر رہے ہیں۔ جس کا ریکارڈ ان کے نام پر نہیں ہے۔

روزنامہ جنگ بتاریخ  مئی 17 سن 2011

 

مئی17 کو ختم ہونے والی ڈیڈ لائن کے باوجود اب موبائل کمپنیوں نے صارفین کو اپنے ریکارڈ کی تصدیق کے لئے اخبارات اور ٹی وی چینلز پر اشتہارات دینا شروع کر دئیے ہیں۔ جس میں انہیں انعامات کی آفر بھی کی جا رہی ہے۔

 

موبی لنک کی جانب سے اخبارات میں دیا گیا اشتہار

 

غیر رجسٹرڈ سمز اور اراکین اسمبلی کا دُہرا معیار” ایک تبصرہ

اپنا تبصرہ بھیجیں